Best Offer

مدرسہ امداد العلوم میں جلسہ دستار فضیلت کا انعقاد

لکھنؤ: یکم اپریل (ابوشحمہ انصاری)
دبگہ روشن آباد کالونی ٹی وی ٹاور کے قریب واقع مدرسہ امداد العلوم میں جلسہ کا انعقاد کیا گیا، مدرسہ کے 7 بچوں نے حفظ قرآن مکمل کیا، 5 بچوں کا استقبال کیا گیا، بچوں کو مولانا سید سہیل حسنی کے ہاتھوں سے انعامات اور اسناد دی گئیں۔ ندوی کے استاد قاری محمد صدیق نے تلاوت قرآن کریم سے جلوس کا آغاز کیا، جلوس کا آغاز قاری فرید الدین نے کیا، لکھنؤ ندوہ کے استاد مولانا سید محمد سہیل حسنی ندوی نے جلوس کی نظامت کی، نظامت کے فرائض قاری احمد حسن نے انجام دیے۔ مولانا سید محمد صہیب حسنی ندوی نے اس موقع پر جلوس نکالا، مولانا سید محمد صہیب حسنی ندوی نے کہا کہ قرآن مجید ایک ایسی کتاب ہے جس میں ساری دنیا کی طاقت حاصل کرنے کے بعد بھی کوئی اس میں کچھ کمی یا اضافہ نہیں کر سکتا، جیسا کہ یہ ہمارے اوپر نازل ہوا ہے۔ مدرسہ کے ذمہ دار قاری احمد حسن جو کہ پوری دنیا میں ایک ہی طریقے سے پڑھایا جاتا ہے، نے کہا کہ ہمارے مدرسے میں ہر سال سالانہ جلسہ ہوتا تھا جو کہ گزشتہ 2 سال سے نہیں ہو سکا۔ کووڈ 19 کو، اس سال کووڈ 19 کی وجہ سے، انتظامیہ کے رہنما خطوط کے پیش نظر جمڈ نے بتایا کہ ہمارے مدرسہ میں دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ ہندی انگریزی ریاضی بھی مدرسہ میں بڑھائی جاتی ہے، لڑکیوں کے لیے آٹھویں تک کلاسز چلائی جاتی ہیں اور جلوس میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے ان کا علمی کورس بھی پڑھایا جاتا ہے۔سراج احمد محمد وحید خان صاحب۔ مولانا محمد مصطفی مدنی بھائی محمد خالد صاحب قاری عبد الرازق صاحب حافظ رحمت علی مولانا خالد صاحب اور بہت سے لوگ موجود تھے۔